وَبِصَوْمِ غَدٍ نَّوَيْتُ مِنْ شَهْرِ رَمَضَانَ.
I Intend to keep the fast for month of Ramadan

دورانِ نماز دوسرے شخص کو امام بنانا

Islamic Q&A
دورانِ نماز دوسرے شخص کو امام بنانا

کتاب و سنت کی روشنی میں

سوال:امام صاحب باجماعت نماز پڑھا رہے تھے کہ دورانِ نماز ان کی آواز بالکل بند ہو گئی۔ امام صاحب نے نماز توڑ دی اور مؤذن کو مصلی پر کھڑا کر دیا۔ مؤذن نے نئے سرے سے نماز پڑھائی۔ کیا امام صاحب کا یہ عمل خلاف شریعت تھا یا اس طرح نماز ہو گئی؟

جواب: کسی بھی عذر کے سبب امام کا نماز توڑ دینا خلاف شریعت اور گناہ نہیں۔ فقہائے کرام نے بیان کیا ہے کہ اس طرح کے عذر کی صورت میں امام کو نماز توڑ دینی چاہئے اور کوئی دوسرا شخص اس کا قائم مقام بنا دیا جائے اور وہ نئے سرے سے نماز پڑھا دے۔ یہی صحیح طریقہ ہے۔